Dr. Allama Muhammad Iqbal is the national poet of Pakistan. He was born on 9th November, 1877. This blog is about the life and poetry of Allama Iqbal. This Blog has the poerty of Iqbal in Urdu, Roman Urdu and English translation.

Post Top Ad

Post Top Ad

Yeh Hoorian e Frangi Dilo Nazar..

يہ حوريان فرنگی ، دل و نظر کا حجاب


يہ حوريان فرنگی ، دل و نظر کا حجاب
بہشت مغربياں ، جلوہ ہائے پا بہ رکاب
دل و نظر کا سفينہ سنبھال کر لے جا
مہ و ستارہ ہيں بحر وجود ميں گرداب
جہان صوت و صدا ميں سما نہيں سکتی
لطيفہ ازلی ہے فغان چنگ و رباب
سکھا ديے ہيں اسے شيوہ ہائے خانقہی
فقيہ شہر کو صوفی نے کر ديا ہے خراب
وہ سجدہ ، روح زميں جس سے کانپ جاتی تھی
اسی کو آج ترستے ہيں منبر و محراب
سنی نہ مصر و فلسطيں ميں وہ اذاں ميں نے
ديا تھا جس نے پہاڑوں کو رعشہ سيماب
ہوائے قرطبہ! شايد يہ ہے اثر تيرا
مری نوا ميں ہے سوز و سرور عہد شباب

No comments:

Post a Comment