Apni Julan Gah Zair e Aasman......

اپنی جولاں گاہ زير آسماں سمجھا تھا ميں


اپنی جولاں گاہ زير آسماں سمجھا تھا ميں
آب و گل کے کھيل کو اپنا جہاں سمجھا تھا ميں
بے حجابی سے تری ٹوٹا نگاہوں کا طلسم
اک ردائے نيلگوں کو آسماں سمجھا تھا ميں
کارواں تھک کر فضا کے پيچ و خم ميں رہ گيا
مہروماہ و مشتری کو ہم عناں سمجھا تھا ميں
عشق کی اک جست نے طے کر ديا قصہ تمام
اس زمين و آسماں کو بے کراں سمجھا تھا ميں
کہہ گئيں راز محبت پردہ دار يہاے شوق
تھی فغاں وہ بھی جسے ضبط فغاں سمجھا تھا ميں
تھی کسی درماندہ رہرو کی صداے درد ناک
جس کو آواز رحيل کارواں سمجھا تھا ميں


EmoticonEmoticon