Dr. Allama Muhammad Iqbal is the national poet of Pakistan. He was born on 9th November, 1877. This blog is about the life and poetry of Allama Iqbal. This Blog has the poerty of Iqbal in Urdu, Roman Urdu and English translation.

Post Top Ad

Wohi Meri Kam Naseebi Wohi Teri Be Niazi

وہی ميری کم نصيبی ، وہی تيری بے نيازی


وہی ميری کم نصيبی ، وہی تيری بے نيازی
ميرے کام کچھ نہ آيا يہ کمال نے نوازی
ميں کہاں ہوں تو کہاں ہے ، يہ مکاں کہ لامکاں ہے؟
يہ جہاں مرا جہاں ہے کہ تری کرشمہ سازی
اسی کشمکش ميں گزريں مری زندگی کی راتيں
کبھی سوزو ساز رومی ، کبھی پيچ و تاب رازی
وہ فريب خوردہ شاہيں کہ پلا ہو کرگسوں ميں
اسے کيا خبر کہ کيا ہے رہ و رسم شاہبازی
نہ زباں کوئی غزل کی ، نہ زباں سے باخبر ميں
کوئی دلکشا صدا ہو ، عجمی ہو يا کہ تازی
نہيں فقر و سلطنت ميں کوئی امتياز ايسا
يہ سپہ کی تيغ بازی ، وہ نگہ کی تيغ بازی
کوئی کارواں سے ٹوٹا ، کوئی بدگماں حرم سے
کہ امير کارواں ميں نہيں خوئے دل نوازی

No comments:

Post a Comment