"Aik Gaye aur Bakri" Poem for Children

ايک گائے اور بکری

(ماخوذ )

بچوں کے لئے


اک چراگاہ ہری بھری تھی کہيں
تھی سراپا بہار جس کی زميں
کيا سماں اس بہار کا ہو بياں
ہر طرف صاف ندياں تھيں رواں
تھے اناروں کے بے شمار درخت
اور پيپل کے سايہ دار درخت
ٹھنڈی ٹھنڈی ہوائيں آتی تھيں
طائروں کی صدائيں آتی تھيں
کسی ندی کے پاس اک بکری
چرتے چرتے کہيں سے آ نکلی
جب ٹھہر کر ادھر ادھر ديکھا
پاس اک گائے کو کھڑے پايا
پہلے جھک کر اسے سلام کيا
پھر سليقے سے يوں کلام کيا
کيوں بڑی بی! مزاج کيسے ہيں
گائے بولی کہ خير اچھے ہيں
کٹ رہی ہے بری بھلی اپنی
ہے مصيبت ميں زندگی اپنی
جان پر آ بنی ہے ، کيا کہيے
اپني قسمت بري ہے ، کيا کہيے
ديکھتی ہوں خدا کی شان کو ميں
رو رہی ہُوں بُروں کی جان کو ميں
زور چلتا نہيں غريبوں کا
پيش آيا لکھا نصيبوں کا
آدمی سے کوئی بھلا نہ کرے
اس سے پالا پڑے ، خدا نہ کرے
دودھ کم دوں تو بُڑبُڑاتا ہے
ہوں جو دُبلی تو بيچ کھاتا ہے
ہتھکنڈوں سے غلام کرتا ہے
کن فريبوں سے رام کرتا ہے
اس کے بچوں کو پالتی ہوں ميں
دودھ سے جان ڈالتی ہوں ميں
بدلے نيکی کے يہ برائی ہے
ميرے اللہ!  تري دہائی ہے
سن کے بکری يہ ماجرا سارا
بولی ، ايسا گلہ نہيں اچھا
بات سچی ہے بے مزا لگتی
ميں کہوں گی مگر خدا لگتی
يہ چراگہ ، يہ ٹھنڈی ٹھنڈی ہوا
يہ ہری گھاس اور يہ سايا
ايسی خوشياں ہميں نصيب کہاں
يہ کہاں ، بے زباں غريب کہاں!
يہ مزے آدمی کے دم سے ہيں
لطف سارے اسی کے دم سے ہيں
اس کے دم سے ہے اپنی آبادی
قيد ہم کو بھلی ، کہ آزادی
سو طرح کا بنوں ميں ہے کھٹکا
واں کی گزران سے بچائے خدا
ہم پہ احسان ہے بڑا اس کا
ہم کو زيبا نہيں گلا اس کا
قدر آرام کی اگر سمجھو
آدمی کا کبھی گلہ نہ کرو
گائے سن کر يہ بات شرمائی
آدمی کے گلے سے پچھتائی
دل ميں پرکھا بھلا برا اس نے
اور کچھ سوچ کر کہا اس نے
يوں تو چھوٹی ہے ذات بکری کی
دل کو لگتی ہے بات بکری کی

9 comments

a very good poem which gives u a moral

a very nice poem for children.:):):):)

good poem

awsome poem gives u a moral lesson'

nice poem we love you allama iqbal

its a best poem


This post is really informative to all kind of people. I am very happy to see the post. I will request you to give more information about this. I have gotten many knowladable speech form here. I have also website where you can get some knowledge which may be for your welfare. Visit here…..
poem

ILLAMA IQBAL'S BEST POEM


EmoticonEmoticon