Dr. Allama Muhammad Iqbal is the national poet of Pakistan. He was born on 9th November, 1877. This blog is about the life and poetry of Allama Iqbal. This Blog has the poerty of Iqbal in Urdu, Roman Urdu and English translation.

Post Top Ad

Qaid Khanay Main..

قيد خانے ميں معتمدکی فرياد



معتمد اشبيليہ کا بادشاہ اور عربی شاعر تھا -ہسپانيہ کے ايک
معتمد حکمران نے اس کو شکست دے کر قيد ميں ڈال ديا تھا
ايسٹ کی نظميں انگريزی ميں ترجمہ ہوکر '' وزڈم آف دی -
سيريز'' ميں شائع ہو چکی ہيں


اک فغان بے شرر سينے ميں باقی رہ گئی
سوز بھی رخصت ہوا ، جاتی رہی تاثير بھی
مرد حر زنداں ميں ہے بے نيزہ و شمشير آج
ميں پشيماں ہوں ، پشيماں ہے مری تدبير بھی
خود بخود زنجير کی جانب کھنچا جاتا ہے دل
تھی اسی فولاد سے شايد مری شمشير بھی
جو مری تيغ دو دم تھی ، اب مری زنجير ہے
شوخ و بے پروا ہے کتنا خالق تقدير بھی

No comments:

Post a Comment