Dr. Allama Muhammad Iqbal is the national poet of Pakistan. He was born on 9th November, 1877. This blog is about the life and poetry of Allama Iqbal. This Blog has the poerty of Iqbal in Urdu, Roman Urdu and English translation.

Post Top Ad

Huwa Na Zor Se Is Ke..

ہوا نہ زور سے اس کے کوئی گريباں چاک


ہوا نہ زور سے اس کے کوئی گريباں چاک
اگرچہ مغربيوں کا جنوں بھی تھا چالاک
مئے يقيں سے ضمير حيات ہے پرسوز
نصيب مدرسہ يا رب يہ آب آتش ناک
عروج آدم خاکی کے منتظر ہيں تمام
يہ کہکشاں ، يہ ستارے ، يہ نيلگوں افلاک
يہی زمانہ حاضر کی کائنات ہے کيا
دماغ روشن و دل تيرہ و نگہ بے باک
تو بے بصر ہو تو يہ مانع نگاہ بھی ہے
وگرنہ آگ ہے مومن ، جہاں خس و خاشاک
زمانہ عقل کو سمجھا ہوا ہے مشعل راہ
کسے خبر کہ جنوں بھی ہے صاحب ادراک
جہاں تمام ہے ميراث مرد مومن کی
ميرے کلام پہ حجت ہے نکتہ لولاک

No comments:

Post a Comment