Tujhe Yaad Kia Nahi Mere.....

تجھے ياد کيا نہيں ہے مرے دل کا وہ زمانہ


تجھے ياد کيا نہيں ہے مرے دل کا وہ زمانہ
وہ ادب گہ محبت ، وہ نگہ کا تازيانہ
يہ بتان عصر حاضر کہ بنے ہيں مدرسے ميں
نہ ادائے کافرانہ ، نہ تراش آزرانہ
نہيں اس کھلی فضا ميں کوئی گوشۂ فراغت
يہ جہاں عجب جہاں ہے ، نہ قفس نہ آشيانہ
رگ تاک منتظر ہے تری بارش کرم کی
کہ عجم کے مے کدوں ميں نہ رہی مے مغانہ
مرے ہم صفير اسے بھی اثر بہار سمجھے
انھيں کيا خبر کہ کيا ہے يہ نوائے عاشقانہ
مرے خاک و خوں سے تونے يہ جہاں کيا ہے پيدا
صلہ شہيد کيا ہے ، تب و تاب جاودانہ
تری بندہ پروری سے مرے دن گزر رہے ہيں
نہ گلہ ہے دوستوں کا ، نہ شکايت زمانہ


EmoticonEmoticon