Dr. Allama Muhammad Iqbal is the national poet of Pakistan. He was born on 9th November, 1877. This blog is about the life and poetry of Allama Iqbal. This Blog has the poerty of Iqbal in Urdu, Roman Urdu and English translation.

Post Top Ad

Tazmeen Brshair Saaib

تضمين برشعر صائب


کہاں اقبال تو نے آ بنايا آشياں اپنا
نوا اس باغ ميں بلبل کو ہے سامان رسوائی


شرارے وادی ايمن کے تو بوتا تو ہے ليکن
نہيں ممکن کہ پھوٹے اس زميں سے تخم سينائی

کلی زور نفس سے بھی وہاں گل ہو نہيں سکتی
جہاں ہر شے ہو محروم تقاضائے خود افزائی

قيامت ہے کہ فطرت سو گئی اہل گلستاں کی
نہ ہے بيدار دل پيری، نہ ہمت خواہ برنائی

دل آگاہ جب خوابيدہ ہو جاتے ہيں سينوں ميں
نو اگر کے ليے زہراب ہوتی ہے شکر خائی

نہيں ضبط نوا ممکن تو اڑ جا اس گلستاں سے
کہ اس محفل سے خوشتر ہے کسی صحرا کی تنہائی

''ہماں بہتر کہ ليلی در بياباں جلوہ گر باشد
ندارد تنگناے شہر تاب حسن صحرائی

No comments:

Post a Comment