Hamayun

ہمايوں

مسٹر جسٹسں شاہ دين مرحوم

اے ہمايوں! زندگی تيری سراپا سوز تھی
تيری چنگاری چراغ انجمن افروز تھی
گرچہ تھا تيرا تن خاکی نزار و دردمند
تھی ستارے کی طرح روشن تری طبع بلند
کس قدر بے باک دل اس ناتواں پيکر ميں تھا
شعلہ گردوں نورد اک مشت خاکستر ميں تھا
موت کی ليکن دل دانا کو کچھ پروا نہيں
شب کی خاموشی ميں جز ہنگامہ فردا نہيں

موت کو سمجھے ہيں غافل اختتام زندگی
ہے يہ شام زندگی، صبح دوام زندگی


EmoticonEmoticon